بہت سے ممالک میں اسقاط کے اختیار کی دستیابی اور اسقاط کی گولیوں کے استعمال سے متعلق قوانین موجود ہیں۔ ایسے ممالک میں، جہاں اسقاط پر پابندی نہیں ہے، زیادہ تر ڈاکٹرز حمل کے پہلے 10 ہفتوں میں ادویات mifepristoneاورmisoprostol کے استعمال کا مشورہ دیتے ہیں۔ لیکن misoprostolان پہلے10 ہفتوں میں اپنے طور پر بہت زیادہ مؤثر ہے۔ گولیوں کے ذریعے اسقاط کی علامات، فوری حمل گرنے سے بہت مشابہ ہیں، اور رازداری سے گولیوں کے ساتھ اسقاط خواتین کے لیے محفوظ ہے۔

اسقاط کی گولیوں میں استعمال کی جانے والی دوا رحم کی نالی ڈھیلی کرنے اور کھولنے (opening to the uterus) اور رحم کو سکیڑکر حمل کو باہر دھکیلنے کے ذریعے طبی اثر دکھاتی ہے۔

misoprostol کے ساتھ آپ کا جسم ایک سے دو گھنٹے کے اندر گولیوں کا پہلا سیٹ جذب کرلے گا اورآپ کو اینٹھن اور بلیڈنگ شروع ہوجائے گی۔ عموماً misoprostol کی آخری گولیاں لینے کے 24 گھنٹے کے اندر اسقاط ہوجاتاہے۔ اکثر یہ اس سے ہوجاتاہے۔

جہاں تک آپ کی تشویش کا تعلق ہے ، ہوسکتاہے آپ پریگنینسی ٹشوخارج کرنے پر حتمی طور پربتاسکیں۔ یہ چھوٹے سے گہرے انگوروں اور باریک جھلیوں، یا ایک سفید، پھولی پھولی تہہ میں لپٹی چھوٹی سی تھیلی جیسا نظرآسکتا ہے۔ حمل کی مدت کے مطابق، یہ ٹشوز آپ کی انگلی کے ناخن جتنے چھوٹے سے لے کر آپ کے انگوٹھے جتنے ہوسکتے ہیں۔ اگر آپ ان ٹشوز کو پہچان سکتی ہیں، یہ ایک نشانی ہے کہ اسقاط کامیاب ہوچکاہے۔ پریگنینسی ٹشوز اکثر خون کی پھٹکیوں میں لپٹے ہوسکتے ہیں۔ ہوسکتاہے آپ نہایت غور سے دیکھے بغیر ان کو نہ پہچان سکیں۔

safe2choose.org چیک

womenonweb.org چیک

womenhelp.org چیک